Home / Latest Top Videos Online / Featured Videos / jamyian ak pur israr muama

jamyian ak pur israr muama


PUBLISHED : February 25, 2015

jamyian ak pur israr muama





jamyian ak pur israr muama
جمائیما:
ایک پراسرار معمہ

جمائیما پاکستانی عوام کے لیۓ ایک پہیلی ہی بنی رہے گی۔ اصلا” جمائیما شمٹ٬اسے عمران خان کی بیوی کے طور پر پیش کیا گیا۔ جو لوگ یہ ثابت کرنا چاہتے ہیں کہ جمائیما عیسائ تھی وہ جھوٹے ہیں۔ اس کا تعلق ایک قدیم یہودی خاندان سے تھا اور اسکا عمران خان کی بیوی بن کر یہاں آنا پاکستان اور مسلمانوں کے خلاف ایک بہت ہی گہری سازش تھی جسے پاکستانی عوام نے عمران خان کو مسترد کرکے ناکام بنا دیا

ایک بہت بڑے ترکے کی وارث اور عمران خان سے عمر میں آدھی ہونے کے باوجود وە کونسے حالات تھے جن کی بناٴ پر اس نے عمران خان سے شادی کی۔ یہ آج بھی ایک گہرا راز ہے۔ اور کیا واقعی کوئ شادی ہوئ تھی؟ کیونکہ اس کے مختلف مردوں سے ان گنت معاشقے اس بات کا ثبوت ہیں کہ اسے شادی پرکوئ یقین نہیں۔ ایک اور سوال کہ کیا اسنے درحقیقت اسلام قبول کیا بھی تھا جیسا کہ عمران خان ہمیں باور کروانا چاہتا تھا۔ اس کے آزادانہ جنسی تعلقات اس بات کی نفی کرتے ہیں۔

ایک اور سوال٬بہت ہی اہم سوال اٹھتاہے۔ کیا اس کی عمران خان سے شادی کے پیچھے کوئ سازش تھی؟ شادی کی خبر عوام اور میڈیا کے لیۓ اچانک اور باعث حیرت تھی۔ ان دونوں کے درمیان رومانس کی بات کبھی بھی نہیں سنی گئ تھی۔ دونوں کی کورٹشپ یعنی شادی سے پہلےکے ملنے ملانے کے بارے میں بھی کوئ نہیں جانتا۔ بظاہر یہ بے جوڑ اور عجیب شادی ایک ارینجڈ میریج یعنی طے کی ہوئ لگتی تھی۔ اگر یہ طے شدە تھی تو کس مقصد سے؟ جمائیما اس وقت بائیس سال کی تھی اور سابقہ کپتان چوالیس سال کا ایک بوڑھا۔ ایسی شادیاں کوئ غیرمعمولی بات نہیں کیونکہ بہت سی لڑکیاں دولت کے لیۓ بوڑھوں سے شادی کرلیتی ہیں۔ لیکن یہاں جمائیما وارث تھی بے انداز دولت کی اور عمران خان ایک بھکاری جو آوارە امیر عورتوں کی آمدنی پر گزارا کررہا تھا۔ اس لیۓ اس شادی میں دولت کوئ مقصد نہیں تھا۔

کیا اس جوڑے کو قریب لانے والی کوئ پراسرار طاقتیں تھیں جن کے خفیہ مقاصد تھے؟

اگر ہم اس شادی کی ٹائمننگ پر غور کریں تو ہمیں اس کے پیچھے پراسرار مقاصد لازمی نظر آئیں گے۔ یہ سال تھا ١٩٩۵ کا۔ عمران خان ورلڈ کپ جیتنے والی ٹیم کا کیپٹن رہ چکا تھا۔ پاکستانی عوام کے لیۓ اس میں ایک زبردست اپیل تھی اور کچھ لوگ پیشن گوئ کر رہے تھے کہ اس شخص کا پاکستان میں ایک روشن مستقبل ہے
١٩٩٦ میں شادی کے فورا” بعد عمران خان نے اپنی پارٹی “پاکستان تحریک انصاف” بنانے کا اعلان کردیا۔ خیال کیا جاتا ہے کہ پارٹی بنانے میں جمائیما کے باپ سر جیمز گولڈشمت کی بہت بڑی مالی امداد حاصل تھی۔

کوئ شخص جسے مغربی معاشرے اور وہاں کے خاندانوں اور افراد کے باہمی رشتوں کے بارے میں علم ہے وە جانتا ہے کہ وہاں جزباتیت نہیں ہوتی۔ وہاں اولاد کی سرپرستی نہیں کی جاتی۔ وە اپنی اولاد کو اپنی مرضی کی زندگی گزارنے کے لیۓ آزاد چھوڑ دیتے ہیں ۔ لیکن جمائیما جس نے کم از کم پبلک کو دکھانے کے لیۓ اپنا مزہب بھی تبدیل کرلیا تھا کے کیس میں اس کے باپ نے عمران خان کا سیاسی کیریر بنانے کے لیۓ بے تحاشا دولت خرچ کی۔ یہ ایک بہت ہی انوکھا رویہ تھا ایک ایسی بیٹی سے جس نے وہاں کے ہر معیار سے ہٹ کر نہ صرف اپنے سے دوگنی عمر والے ایک شخص سے شادی کی تھی

بلکہ اپنا مزہب تبدیل کر کے اسلام قبول کرکے ایک ایسے معاشرے میں رہنے پر رضامند تھی جسے وە لوگ فرسودە تصور کرتے تھے۔ یہ واقعی ایک انہونی بات تھی۔ ایسا ہونا ناممکن ہے بغیر کسی بہت بڑے مقصد کے۔ ایک ایسا مقصد جو بہت پیچیدہ اور چھپا ہوا ہے۔
اگر آپ اس مقصد کو تلاش کرلیں تو آپ جمائما کا معمہ حل کرلیں گے








Share:


Latest News